پاکستانی صارفین کو ٹوئٹر تک رسائی میں دشواری کا سامنا

پاکستان میں مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر کے صارفین کو اپنے اکاؤنٹس تک رسائی میں دشواری کا سامنا ہے تاہم اس بارے میں ٹوئٹر نے کوئی بیان جاری نہیں کیا۔

جبکہ کئی صارفین کے مطابق دیگر ممالک میں ٹوئٹر کی ویب سائٹ اور ایپلی کیشن معمول کے مطابق کام کر رہی ہے۔

آن لائن پلیٹ فورمز کی دستیابی کا جائزہ لینے والی ویب سائٹ ڈاؤن ڈیٹیکٹر کے مطابق ٹوئٹر کو کچھ مسائل کا سامنا ہے۔

صارفین اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر لاگ ان نہیں کر پا رہے ہیں اور جو پہلے سے لاگ ان تھے ان کا ٹوئٹر پیج لوڈ نہیں ہو رہا ہے بلکہ کچھ دیر بعد this site cant be reached کا پیغام دکھائی دیتا ہے۔

پراکسی وی پی این کے تحت ٹوئٹر تک رسائی حاصل کی جا سکتی ہے۔

سوشل میڈیا صارفین ٹوئٹر کے اس مسئلے سے بے خبر نہ رہے اور جن صارفین کو اپنے اکاؤنٹس تک رسائی حاصل تھی وہ اس معاملے پر تبصرے کرنے لگے۔

ٹوئٹر صارف عمار رشید نے لکھا کہ ‘پاکستان میں ٹوئٹر کی کیا اپ ڈیٹ ہے؟ کیا یہ اب کام کر رہا ہے؟ ٹوئٹر کو کیا ہوا تھا؟’

ایک اور صارف اسامہ خلجی نے لکھا کہ ‘پاکستان میں ٹوئٹر کی کچھ صارفین کے لیے دستیابی اور کچھ کے لیے عدم دستیابی کی کئی رپورٹس مل رہی ہیں۔ زوم ایپلی کیشن بھی کام نہیں کر رہی۔ کیا کسی اور کو بھی ایسے ہی مسئلے کا سامنا ہے؟’

کچھ صحافیوں‌اور صارفین کی طرف سے یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ پاکستان میں ٹویٹر اور زوم ”ساتھ ورچوئل کانفرنس 2020” کی وجہ سے بند کیا گیا۔ آج ہونے والی اس آن لائن کانفرنس میں بہت سے چہرے ایسے شامل ہیں جو پاکستانی سیکیورٹی محکموں کے لیے پسندیدہ نہیں ہیں۔ کچھ لوگ وہ بھی ہیں جنہوں نے دوسرے ملکوں میں مختلف وجوہات کی بنا پر پناہ لے رکھی ہے اور وہ پاکستان کے طاقتور سمجھے جانے والے محکموں کے ناقد کے طور پر جانے جاتے ہیں۔

ایک صحافی کا کہنا ہے کہ اگر یہ اطلاع درست ہے تو اسے ایک ایسی کوشش ہی کہا جا سکتا ہے جس سے لوگ کانفرنس کو لائیو سننے سے محروم رہ سکتے ہیں۔ بعد میں یہ ویڈیو ہر کوئی دیکھ لے گا۔ گویا یہ بندش ایک طرح سے اس کانفرنس کی تشہیر ہو گئی،ہاں اگر ریاستی محکمے ٹویٹر، فیس بک اور یوٹیوب مکمل طور پر بند کر دیں تو الگ بات ہے

Leave a Reply

Translate »
%d bloggers like this: