مقبول بٹ شہید کا یوم شہادت: سامراجی پالیسیوں، مہنگائی، بیروزگاری اور قومی و طبقاتی غلامی کےخلاف احتجاج کا اعلان

جموں کشمیر نیشنل سٹوڈنٹس فیڈریشن نے شہید کشمیر مقبول بٹ شہید اور شہدائے چکوٹھی کے یوم شہادت کے موقع پر کشمیر بھر اور بیرون ریاست مختلف مقامات پر بھرپور پروگرامات ، احتجاجی ریلیاں اور جلسے جلوس منعقد کرنے کا اعلان کیا ہے، شہید مقبول بٹ اور شہدائے چکوٹھی کے یوم شہادت کے موقع پر آئی ایم ایف کی سامراجی پالیسیوں، مہنگائی، بیروزگاری، غربت، جہالت، قومی و طبقاتی محرومی اور سرمایہ دارانہ استحصالی نظام کے خلاف احتجاج کیا جائے گا، طلبہ یونین کے الیکشن شیڈول کے فوری انعقاد کا مطالبہ کیا جائے گا۔

پونچھ کے دو شہروں ہجیرہ اور راولاکوٹ میں احتجاجی ریلیاں منعقد کی جائینگی، اس کے علاوہ پلندری، باغ، میرپور، کوٹلی ، کراچی، اسلام آباد سمیت مختلف مقامات پر ریلیاں اور تقاریب منعقد کی جائینگی۔

یہ بات مرکزی صدر جے کے این ایس ایف ابرار لطیف نے یہاں ضلع پونچھ کے جنرل ورکرز اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی، اس اجلاس سے مرکزی صدر ابرار لطیف کے علاوہ سابق مرکزی صدر بشارت علی خان، سابق سینئر نائب صدر خلیل بابر، سیکرٹری جنرل یاسر حنیف، چیف آرگنائزر تیمور سلیم، ڈپٹی سیکرٹری مالیات ارسلان شانی، ایڈیٹر عزم التمش تصدق، ممبر سی سی بشریٰ عزیز، سیکرٹری اطلاعات نقاش امین، سابق چیف آگنائزر تنویر انور، مرکزی رہنما واجد خان اور دیگر رہنماﺅں نے خطاب کیا۔

اجلاس میں ضلع پونچھ میں منعقد کئے جانے والے پروگرامات کا جائزہ لیا گیا اور یہ طے کیا گیا کہ پونچھ میں جے کے این ایس ایف اپنے آزادانہ پروگرامات ہجیرہ اور راولاکوٹ میںمنعقد کریگی، جن کی رابطہ مہم کےلئے مختلف کمیٹیاں تشکیل دی گئیں، داتوٹ، بیڑیں، تھوراڑ، کھائی گلہ، علی سوجل ، ہجیرہ، کتھیاڑہ، سیراڑی اور دیگر مقامات پر کارنرمیٹنگز کے ٹارگٹ لئے گئے۔

مقررین نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مقبول بٹ شہید کشمیر کی آزادی کی تحریک کے سرخیل ہیں جنہوں نے کشمیر سے ہر طرح کے غلامی اور استحصال کے خلاف علم بغاوت بلند کرتے ہوئے اپنی جان کا نذرانہ پیش کر کے اس تحریک کو جلا بخشی۔ مقبول بٹ شہید اور شہداءچکوٹھی کے یوم شہادت کے موقع پر مختلف قوتیں پروگرامات اور جلسے ، جلوس منعقد کرتی ہیں اور سامراجی اداروں سے اپیلیں کی جاتی ہیں۔ لیکن جموں کشمیر نیشنل سٹوڈنٹس فیڈریشن ہر سال مقبول بٹ شہید اور شہداءچکوٹھی سمیت دیگر شہدائے کے یوم شہادت انکے ادھورے مشن کو آج کے عہد کے تقاضوں کے مطابق آگے بڑھانے کے عزم کے اعادہ کےلئے مناتی ہے۔

شہداءکی قربانیاں ہم سے یہ تقاضا کرتی ہیں کہ ہم اس ظالم و جابر سامراجی نظام کے خلاف جدوجہد کو تیز تر کرتے ہوئے محنت کشوں اور نوجوانوں کی وسیع تر پرتوں کو جدید سائنسی نظریات سے لیس کریں اور نہ صرف کشمیر میں سامراجی قبضے کے خلاف جدوجہد کو منظم کریں بلکہ ہر طرح کے سماجی و معاشی استحصال کے خاتمے کی جدوجہد کو منظم کرتے ہوئے کشمیر کے انسانوں کی حقیقی آزادی کےلئے آگے بڑھیں۔

آج کشمیر کے محکوم و مظلم انسانوں کی حقیقی آزادی اس خطے پر قابض سرمایہ دارانہ استحصالی نظام اور اسکی پروردہ ریاستوں اور حکمران اشرافیہ کو جڑوں سے اکھاڑ پھینکتے ہوئے ایک سوشلسٹ انقلاب کے ذریعے منصفانہ معاشرے کے قیام کے ذریعے ہی ممکن ہے۔ جے کے این ایس ایف اس جدوجہد کو منطقی انجام تک پہنچانے تک اپنی جدوجہد جاری و ساری رکھے گی۔

Leave a Reply

Translate »
%d bloggers like this: